سعودی حکومت نے عمرہ ویزے کا آغاز کردیا اور سعودی حکومت نے اس سال 15لاکھ سے زائد پاکستانی کے عمرہ زائرین کو عمرہ ویزے جاری کرنے کا فیصلہ کیا ہے

فیصل آباد(ویب ڈیسک) سعودی حکومت نے عمرہ ویزے کا آغاز کردیا اور سعودی حکومت نے اس سال 15لاکھ سے زائد پاکستانی کے عمرہ زائرین کو عمرہ ویزے جاری کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ 2017ءحج آپریشن کے دوران فیصل آباد سمیت ملک بھر سے ایک لاکھ 80ہزار حجاج اکرام نے حج کی سعادت حاصل کی ہے ، حکومت پاکستان نے آئندہ سال سرکاری سیکم کے تحت مزید حج سستاکرنے کا فیصلہ کرلیا.ترجمان حکومت پاکستان وزرات مذہبی امور کا کہناکہ سعودی عرب میں قیام و طعام اور ٹرانسپورٹیشن کی عالمی معیا ر کی سہولتیں دستیاب ہیں جو ہر ملک کے شہریوں کو ان کے بجٹ کے مطابق ہی دی جاسکتی ہیں اور سعودی عرب میں کسی بھی سرکاری یا نجی ادارے کی کوتاہی برداشت نہیں کی جا سکتی

 

لہذا سعودی حکومت معاہدوں کے مطابق سروسز دینے کی ذمہ داری کو ہر سال یقینی بناتی ہے،جبکہ پہلا سے حکومت نے حجاج اکرام اور معتمرین کیلئے مزید سہولیات اور حج اخراجات میں 20سے 25فیصد کمی کی ہے۔خبررساں ایجنسی کے مطابق سعودی حکومت نے عمرہ زائرین پر میڈیکل انشورنس ٹیکس سرکاری ٹرانسپورٹ کے لازمی استعمال اور بائیو میٹرک کی شرائط عائد کی تھی، اس کڑی شرائط کے بعد پاکستان کی نجی کمپنیاں نے عمرہ زائرین سے تقریباً 10 سے 15 ہزار روپے کا مزید مطالبہ کردیا جبکہ پاکستان کی نجی کمپنیاں پہلے ہی عمرہ زائرین کو دونوں ہاتھوں سے لوٹ رہی ہیں ، عمرہ زائرین نے وزیراعظم شاہد خاقان عباسی ،وزارت مذہبی اموروحج اس سے اس سلسلہ میں مطالبہ کیا گیاتھا کہ فوری نوٹس لیا جائے جس پرپاکستان وزارت مذہبی اموروحج نے سعودی وزارت حج وعمرہ کو آگاہ کیا تھا۔

تاریخ اشاعت : 2017-10-08 00:00:00
مقبول ترین خبریں
امیگریشن خبریں
SiteLock