وزیر اعظم نواز شریف کے خلاف امریکہ کی تاریخ کا سب سے بڑا احتجاجی مظاہرہ،اقوام متحدہ کے سامنے کی فضاء ’’گو نواز گو‘‘ کے نعروں سے گونج اٹھی

 

نیویارک (پاکستانی نیوزپیپر ) وزیر اعظم نواز شریف کے خلاف امریکہ کی تاریخ کا سب سے بڑا احتجاجی مظاہرہ جمعہ کو یہاں اقوام متحدہ کے سامنے ہوا ۔ تحریک انصاف امریکہ کے زیر اہتمام ہونیوالے اس احتجاجی مظاہرے میں اقوام متحدہ کے سامنے کی فضاء ’’گو نواز گو‘‘ کے نعروں سے گونج اٹھی۔

 

 

 

مظاہرے کی قیادت پاکستان تحریک انصاف کے مختلف گروپوں کے قائدین محمود اعوان،امجد نواز، اکرم مرزا، مزمل انوار،دبیر ترمذی ، فوزیہ قصوری ، مجاہد خان، آصف چوہدری ،پرویز ریاض امراء سمیت دیگر قائدین نے کی تاہم مظاہرے میں صبح سب سے پہلے گیارہ بجے کا پرمٹ حاصل کرنے والے محمود اعوان، امجد نواز اور ان کے ساتھی اوپننگ بیٹس مین کی حیثیت سے صبح گیارہ بجے ہی اقوام متحدہ کے سامنے بڑی تعداد میں مظاہرین کو اکٹھا کرنے میں کامیاب ہو گئے

 

 

لیکن مظاہرے میں شریک مظاہرین کی بڑی تعداد نے قطع نظر اس بات کہ مظاہرے کا اہتمام کس نے کیا اور پرمٹ کس نے حاصل کیا؟میاں نواز شریف کی آمد اور مظاہرے کی اطلاع ملنے پر اقوام متحدہ کے سامنے جمع ہو گئے

 

،ان مظاہرین نے اپنے ہاتھوں میں تحریک انصاف کے جھنڈے اور عمران خان کی بڑی تصویروں کے علاوہ وزیر اعظم میاں نواز شریف کے خلاف پلے کارڈز اور بینرز اٹھا رکھے تھے جن پر گو نواز گو سمیت مختلف نعرے درج تھے ۔ مظاہرین تمام وقت گو نواز گو کے فلک شگاف نعرے لگاتے رہے اور مطالبہ کرتے رہے کہ وزیر اعظم فی الفور مستعفی ہوں

 

 

اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے اجلاس میں دنیا بھر سے 170سے زائد حکمران اور سربراہان مملکت شریک ہوئے، کے موقع پر وزیر اعظم پاکستان میاں نواز شریف کے خطاب کے موقع پر ہونیوالا یہ مظاہرہ نیویارک کے مقامی شہریوں اور میڈیا کی توجہ کا بھی مرکز بنا رہا

 

مظاہرے سے خطاب کرتے ہوئے اکرم مرزا، امجد نواز، فوزیہ قصوری ، مجاہد خان، آصف چوہدری ، پرویز ریاض امراء، ضمیر احمد چوہدری ، مزمل انوار، یاسر علی ،،دبیر ترمذی ، محمود اعوان ، احسن رانجھا ، خیام علی شاکر ، زمان آفریدی ، فیاض خان نے کہا کہ نیویارک میں پاکستانی امریکن کمیونٹی کے ہزاروں شرکاء نے یہ فیصلہ دے دیا ہے کہ میاں نواز شریف عوام کی تائید سے محروم ہیں اور ان کا اب وزیر اعظم کے عہدے پر فائز رہنے کا کوئی جواز نہیں ۔

 

 

 

تحریک انصاف کے احتجاجی مظاہرے میں پاکستان عوامی تحریک امریکہ کے مقامی سپورٹرز ڈاکٹر طاہر القادری کی تصاویر اور بینرز کے ساتھ شریک رہے تاہم ان کی تعداد دو تین درجن سے زائد نہ تھی تاہم تحریک انصاف کے مظاہرین ہزاروں کی تعداد میں شریک ہوئے ۔ مظاہرے کے منتظمین نے دعویٰ کیا کہ مظاہرے میں پانچ سے سات ہزار افراد نارتھ امریکہ بھر سے شریک ہوئے ۔

 

 

مزید تفصیل کے لئے وزٹ کرتے رہیں

تاریخ اشاعت : 2014-09-26 00:00:00
مقبول ترین خبریں
امیگریشن خبریں
SiteLock