محمد نواز واہلہ امریکی ریاست کنکٹی کٹ سپریم کورٹ کے پہلے پاکستانی مسلمان جج مقرر

کنکٹی کٹ (خصوصی رپورٹ )امریکہ میں پہلے پاکستانی امریکن مسلمان کی امریکی ریاست کنکٹی کٹ میں سٹیٹ سپریم کورٹ جج کی تقرری کی گئی ہے ۔60سالہ محمد نواز واہلہ جن کا تعلق کنکٹی کٹ کے علاقے (گلاسٹن بری) سے ہے ، کا تعلق ڈیموکریٹک پارٹی سے ہے ۔ ان کی بطور کنکٹی کٹ سپریم کورٹ جج تقرری کی گذشتہ سال منظوری دی گئی ۔اس منظوری کے بعد محمد نواز واہلہ کنکٹی کٹ کے پہلے پاکستانی و مسلم جج کی حیثیت سے اپنے فرائض انجام دے رہے ہیں ۔


پاکستانی امریکن کمیونٹی کی معروف سماجی شخصیت اعجاز احمد شاہد اور سوئٹزرلینڈ میں مقیم معروف پاکستانی سوئس شخصیت محمد نواز واہلہ (آف سوئٹزر لینڈ) جنہوں نے محمد نواز واہلہ کی بطور سٹیٹ سپریم کورٹ جج تقرری کا بارے میں بتایا ، نے اپنے بیان میں جسٹس واہلہ کو جسٹس بننے پر مبارکباد دی اور کہا کہ وہ پاکستانی امریکن اور امیگرنٹس کمیونٹی کے لئے رول ماڈل ہیں اور اس بات کا بھی ثبوت ہیں کہ امریکی معاشرے و نظام میں کمیونٹیز کو ترقی اور آگے بڑھنے کے یکساں مواقع موجود ہیں ۔

 

انہوں نے کہا کہ پاکستانی امریکن کمیونٹی کو ان کے انتخاب و تقرری پر فخر ہے اور ہم ان کےلئے پرخلوص اور نیک تمنائیں رکھتے ہیں ۔


جسٹس نواز واہلہ نے 1974میں پنجاب یونیورسٹی سے لاءمیں ڈگری حاصل کی ۔1991میں انہوں نے یونیورسٹی آف ٹیکساس، آسٹن اور پھر 1998سے یونیورسٹی آف ہیوسٹن سے ڈگری حاصل کی ۔محمد نواز واہلہ نے امریکہ منتقل ہونے سے قبل 20سال تک پاکستانی آرمی میں اپنے فرائض انجام دئیے اور وہ بطور میجر ریٹائر ہوئے ۔

 

 

 

تاریخ اشاعت : 2013-03-19 00:00:00
مقبول ترین خبریں
امیگریشن خبریں
SiteLock