سپریم کورٹ نے صدر اوبامہ کے ایگزیکٹو امیگریشن آرڈر کیخلاف فیصلہ دیدیا ،آخری امید بھی دم توڑ گئی

 

نیویارک(خصوصی رپورٹ)امریکہ میں بسنے والے ایسے غیر قانونی تارکین وطن کہ جن کے بچے یا تو امریکی شہری یا گرین کارڈ ہولڈر ہیں اور ایسے افراد کہ جو کم از کم سولہ سال کی کم عمر میں امریکہ ّآئے تھے کو عارضی لیگل سٹیس دینے کے سلسلے میں صدر اوبامہ کے ایگزیکٹو آرڈر کے خلاف یو ایس سپریم کورٹ نے فیصلہ دے دیا ۔ یوں ان غیر قانونی تارکین وطن کی یہ آخری امید بھی دم توڑ گئی اور صدر اوبامہ کا خواب بھی اب ان کے دور صدارت میں شرمندہ تعبیر نہ ہوگا۔ سپریم کورٹ نے چار چار کے مطابق فیصلہ دیا جس کی وجہ سے ٹیکساس فیڈرل جج کے فیصلہ کو برقرار قرار دیا گیا۔ سپریم کورٹ نے اپنا فیصلہ صرف ایک فقرہ میں لکھا۔ سپریم کورٹ کے اس فیصلہ کا امریکہ میں رہنے والی غیر قانونی تارکین وطن کمیونٹی کے لئے یہ مطلب ہوگا کہ انہیں آئندہ آنیوالا وقت بھی یہاں سائیوں (Shadows)میں گذارنا ہوگا۔ امیگریشن اصلاحات کے حامیوں اور امیگرنٹ کمیونٹیز نے فیصلہ پر شدید مایوسی کا اظہار کیا ہے ۔

 

تاریخ اشاعت : 2016-06-23 00:00:00
مقبول ترین خبریں
امیگریشن خبریں
SiteLock