تحریک انصاف نیویارک کے زیر اہتمام جے آئی ٹی رپورٹ منظر عام پر آنے کےبعدنیویارک میں جشن انصاف


    تحریک انصاف نیویارک کے زیر اہتمام جے آئی ٹی رپورٹ منظر عام پر آنے کے بعدنیویارک میں جشن انصاف


 پی ٹی آئی نیویارک نے امجد نواز کی قیادت میں نیویارک میں مٹھائیاں بانٹیں،سچ جیت گیا 
، جھوٹ ہار گیا ، وفاداری کی سیاست جیت گئی ، مکاری کی سیاست ہار گئی ،امجد نواز


چور چوریاں پکڑے جانے ر رور رہے ہیں بھاگنے نہیں دیں گے 
،خورشید بھلی،ایگل پینل میں پی ٹی آئی کا اصل چہرہ ہیں تمام محب وطن ان کاساتھ دیں ،شیخ تو قیر الحق


امجد نواز کی تجریہ کار قیادت میں کام کرنا ہمارے لئے قابل فخر ہے ¾ میں اور میرے تمام ساتھی دل و جان سے امجد نواز کی ٹیم کے ساتھ ہیں ،مزمل انوار
 عمران خان نے مافیاکے چہرے سے خوبصورت نقاب اتار کران کے بھیانک چہرے ننگے کر دیئے 
، ارشد خان


ہم امجد نواز 
، ارشد خان اور خورشید بھلی کی صورت میں بہترین قیادت سامنے لائے ہیں،فیاض خان ، زمان آفریدی


ایگل پینل کو اس کے کام اور امیدواروں کو ان کے کردار کی روشنی میں پرکھیں 
، اکرم اعوان

نیویارک (خصوصی رپورٹ)جے آئی ٹی کی رپورٹ منظر عام پر آنے کے بعد پاکستان کی طرح امریکہ میں بھی کرپشن اور چور بازاری کی سیاست سے بے راز پاکستانیوں میں خوشی کی لہر دوڑ گئی اور لوگوں نے خوشیاں منانے اور مٹھائیاں بانٹنے کاسلسلہ شروع کر دیا۔ اس سلسلے میں پاکستان تحریک انصاف نیویارک نے سینئر رہنما اور امیدواربرائے صدارت امجد نواز کے زیر قیادت فور ی طور پر ایک تقریب کا اہتمام کیا۔

 

ٹیسٹ آف لاہور ریسٹورنٹ میں پی ٹی آئی کے کارکنوں کا جوش و خروش اور خوشی دیدنی تھی ایک دوسرے کو مٹھائیاں کھلائی جار ہی تھیں۔ گلے مل رہے تھے اور عمران خان زندہ باد، کون بچائے گا پاکستان، عمران خان عمران خان اور گو نواز گو کے نعرے لگ رہے تھے۔

 


 

پی ٹی آئی نیویارک کے اس جشن فتح کے انتظامات میں میدوار برائے نائب صدارت ارشد خان ،امیدوار برائے جنرل سیکرٹری خورشید احمد بھلی ،محمد اکرم فیاض خان ،زمان آفریدی ، قیصر احمد ، سلیم ملک ، چوہدری عبدالقیوم ، ندیم یوسف ،راجہ حسام شکیل ، حنین ارشد، شیخ سہیل ،امین اعوان، وسیم قریشی ، گل خان نے نمایاں کردارادا کیا ۔


 امجد نواز نے خصوصی طور پر کہا کہ محمد اکرم اعوان ایک انتہائی مخلص پارٹی رہنما ہیں جو اس پینل کی ریڑھ کی ہڈی ہیں اور ممبر سازی میں انہوں نے ریکارڈ کام کر دیا ہے۔ تقریب میں پی ٹی آئی نیویارک کے سابق منتخب صدر مزمل انور اور پی ٹی آئی کے مخلص سپورٹر شیخ توقیر الحق نے خصوصی شرکت کی۔ پی ٹی آئی نیویارک ایگل پینل کی بھر پور حمایت کا اعلان کیا۔

 

امجد نواز نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ آج سچ جیت گیا ۔ جھوٹ ہار گیا۔ وفاداری جیت گئی اور مکاری ہارگئی۔ قوم کو عمران خان کی قیادت اور ان کی جہد مسلسل پر فخر ہے۔ عمران خان کرپشن مافیہ کے چنگل میں پھنسے ہوئے سیاسی نظام کو صاف اور شفاف بنانے کا واحد علمبردار ہے۔ اللہ نے اس کی محنت اور مستقل مزاجی کا ثمر دینے کاسلسلہ شروع کر دیا ہے وہ ایک شخص نہیں ایک نظریہ اور پوری قوم اس نظریے سے متفق ہے ۔پی ٹی آئی نیویارک اور امریکہ کے کارکن اس عزم کا اعادہ کرتے ہیں کہ ہم اپنے قائد عمران خان کے اس طرح دست وبازو بنے رہیں گے اوران کی اس کوشش میں ان کے زیادہ سے زیادہ مدد گار ثابت ہونے کی کوشش کریں گے۔

 

امجدنواز نے نیویارک میں ہونے والے انٹرا پارٹی الیکشن کے حوالے سے بات کرتے ہوئے کہا کہ یہ سہرہ بھی صرف عمران خان کے سر ہے کہ انہوں نے اپنی پارٹی میںہر لیول خصوصاًبیرون ملک تنظیموں میں ممبران اور کارکنوں کو اپنے لیڈر خود چننے کاموقعہ دے رکھا ہے۔ورنہ دوسری تمام پارٹیاں اپنی پسند اور ناپسند کی بنیادوں پر نامزدگیاں کرتی رہیں اورسالہا سال اپنی پسند کے کارندوں کو مسلط کئے رکھتے ہیں۔ انہوں نے اپیل کی کہ پی ٹی آئی نیویارک کے ممبران کو پارٹی مضبوط بنائیں اور انتخابات میں ہمارے پینل کاحصہ بنیں۔

 

انہوں نے اس موقعہ پر اپنے ساتھی امیدواروں نائب صدر ارشدخان اور جنرل سیکرٹری خورشید بھلی کا تعارف کرواتے ہوئے کہا کہ یہ دونوں عرصہ درازسے پی ٹی آئی کے ساتھ منسلک ہیں اور پارٹی اور عمران خان اور شوکت خانم جیسے علیٰ خدمات کے اداروں کی خاموشی سے مدد کررہے تھے۔ یہ اگرچہ کسی تنظیمی ڈھانچے کا حصہ نہ تھا مگر اس کے باوجود پارٹی کے پروگراموں اور مظاہروں میں شرکت کرتے ہیں اور پاکستان میں بھی معروف اور متحرک سیاسی گھرانوں جو پی ٹی آئی کے ساتھ وابستہ ہیں سے تعلق رکھتے ہیں انہوں نے اس کے علاوہ اپنے ساتھیوں فیاض خان ، زمان آفریدی ،محمد اکرم ، توقیر الحق ،مزمل اور سلیم ملک ،عبدالقیوم ،قیصر احمد، ندیم یوسف اور دیگر کا فرداً فرداً شکریہ اداکیا اور ان کی پارٹی خدمات کو سراہا۔
 

اس موقعہ پرپی ٹی آئی نیویارک کے سابقہ منتخب صدر مزمل انور کا ان کے تمام ساتھیوں نے بڑی گرم جوشی اور عزت و احترام کے ساتھ استقبال کیا اور کہاکہ جے آئی ٹی رپورٹ پر سب کو مبارکباد دی اور کہا کہ عمران خان نے اس قوم کو عزت اور ترقی کے راستے پر ڈالنے کا جو وعدہ کر رکھا ہے وہ اس کو ہر صورت میں پورا کرت نظر آتے ہیں۔ جس پر فخر ہے اور اپنا کام اسی محنت سے جاری رکھیں گے۔
 

انہوں نے اس موقعہ پر کہا کہ میں امجد نواز کو سالہا سال سے جانتا ہوں۔ پی ٹی آئی کےلئے یہ فخر اور خوش قسمتی کی بات ہے کہ اس ان جیسے پڑھے لکھے ،تجربہ کار، باکردار اور ان تھک شخص کی قائدانہ خدمات حاصل ہیں۔ پی ٹی آئی کا اصلی چہرے ہیں ان کی قیادت میں پی ٹی آئی کی کارکردگی بہتر ہو گی اور پارٹی تنظیمیں طور پر مضبوط ہوگی۔

 

میں اعلان کرتا ہوں کہ میں ان کی قیادت میں کام کروں گا اور سب سے اپیل کرتا ہوں کہ وہ یہاں پر ہونے والے پارٹی الیکشن میں پی ٹی آئی نیویارک (ایگل پینل) جو کہ ان کا انتخابی پینل ہے کو سپورٹ کریں اور زیادہ سے زیادہ ممبر سازی کریں۔ امجد نواز کی ٹیم کے دوسرے امیدوار ارشد خان اورخورشید بھلی باکردار اور محنتی لوگ ہیں اور انہی جیسا مزاح رکھتے ہیں اور کام اور محنت کے ساتھ آگے بڑھنے پر یقین رکھتے ہیں۔
 

شیخ توقیر الحق نے کہا کہ امجد نواز اس کمیونٹی کا انتہائی معتبر اور بڑا نام ہے جنہوں نے اپنے کردار اور کام کی وہ سے لوگوں کے دلوں میں اپنی عزت بنائی ہے۔ اب بھلا کوئی بھی محب وطن اور سمجھ بوجھ رکھنے والا کمیونٹی گروپ یا افراد کسی اورکی حمایت کیسے کرے۔ یہی لوگ پی ٹی آئی کا اصلی چہرہ ہیں اپنی لوگوں کی پی ٹی آئی کو ضرورت ہے اور اگر کسی اور کو پی ٹی آئی میں اپنا مکام بنانا ہے تو نہی چاہئے کہ وہ ان کی قیادت میں کام کر کے سیاسی تربیت حاصل کریں اور اپنے آپ کو آنے وا لے وقتوں میں قیادت کے لئے تیار کریں۔ میں اور میرے تمام ساتھی پی آئی ٹی کے ساتھ ہیں اور بھر پور طریقے سے ان کی مدد کریں گے۔

 

فیاض خان ،زمان آفریدی اور سلیم احمد ملک نے کہا کہ ہم نے پارٹی کی بہتری کے لئے اس پینل کا خوداعلان کیا ہے ۔ اگر کسی کے پاس ہماری جیسی قیادت ہے تو سامنے لائے اور ہماری قیادت کے ساتھ مذاکرہ کرے انہوں نے سب سے اپیل کی کہ ایگل کو جانی کریں۔
 

اکرام اعوان نے کہا کہ ہم سالہا سال سے پارٹی کی خدمات انجام دے رہے ہیں اور عمران خان کے ہاتھ مضبوط کرنے کی کوشش میں مصروف ہیں ۔ہم2013 میں عام انتخابات میں امجدنواز کی قیادت میں امریکہ سے انصاف فلائٹ لے کر گئے۔علاوہ ازیں جب2014 میں جب نوازشریف نیویارک میںاقوام متحدہ میں خطاب کے لئے آئے تو ان کے خلاف تاریخ ساز مظاہرہ کیا جس میں آٹھ افراد نے شرکت کی۔ میں درخواست کرتاہوں کہ پی ٹی آئی پینل کو اس کی کارکردگی کی بنیادوں پر پرکھیں اور اس کے قائدین کو ان کے علم اور تجربہ کی روشنی میں جانچیں آپ کے لئے فیصلہ کرنا بڑآسان ہو جائے گا۔

امجد نواز اگرچہ اسلام آباد میں رہتے ہیں لیکن ان کا آبائی حلقہ ناروال احسن اقبال کا حلقہ ہے ۔انہوں نے نہ صرف نواز شریف اور شہباز کے ساتھ اصول اور نظریہ کی بنیاد پر اپنے ذاتی تعلقات ختم کر دیئے بلکہ احسن اقبال کے ساتھ اپنی25 سالہ دوستی ختم کر کے صرف اورصرف پارٹی کی خاطر پی ٹی آئی کے امیدوار ابرالحق کی بھر پور مہم کی اور ایک مخلص کارکن کی حیثیت سے اپنا فرض ادا کیا۔اس کے ساتھ ساتھ ہم نے پی ٹی آئی نیویارک کے پلیٹ فارم سے امجد نواز کا لکھا ہوا پارٹی ترانہ لانچ کیا۔
 


تاریخ اشاعت : 2017-07-12 00:00:00
مقبول ترین خبریں
امیگریشن خبریں

SiteLock