بینظیر انکم سپورٹ پروگرام فنڈ کو غلط ہاتھوں میں جانے سے روکنے کے لئے فوری اقدامات کی ضرورت ہے۔ برطانوی ڈپارٹمنٹ آف انٹرنیشنل ڈویلپمنٹ

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن ) برطانوی حکام نے بینظیر انکم سپورٹ پروگرام میں مبینہ گھپلوں پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ فنڈ کو غلط ہاتھوں میں جانے سے روکنے کے لئے فوری اقدامات کی ضرورت ہے۔ برطانوی ڈپارٹمنٹ آف انٹرنیشنل ڈویلپمنٹ کی رپورٹ کے مطابق بی آئی ایس پی کے اکثر کارڈ ہولڈرز کیش مشین استعمال نہیں کر سکتے اور کچھ لوگ معاوضہ لے کر کارڈ ہولڈرز کو کیش فراہم کرتے ہیں۔برطانوی میڈیا کے مطابق بی آئی ایس پی کی چیئرپرسن ماروی میمن اس معاملے پر بات چیت کے لئے اگلے ماہ برطانیہ جائیں گی۔ بی آئی ایس پی کے کارڈ ہولڈرز کو ہر تین مہینے بعد ساڑھے چار ہزار روپے ملتے ہیں اور اس فنڈ میں 56 ارب 90 کروڑ روپے برطانوی امداد بھی شامل ہے۔

تاریخ اشاعت : 2017-08-15 00:00:00
مقبول ترین خبریں
امیگریشن خبریں
SiteLock