الطاف حسین اکتوبر میں امریکہ کا دورہ کرینگے

واشنگٹن: متحدہ قومی موومنٹ (ایم کیو ایم) کے قائد الطاف حسین کا کہنا ہے کہ وہ پاکستان میں سیاسی کارکنوں کے خلاف مبینہ طور پر انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کو اجاگر کرنے کے لیے رواں برس اکتوبر میں امریکا کا دورہ کریں گے۔ امریکا میں ایم کیو ایم کے 20 ویں سالانہ کنونشن کے موقع پر وائٹ ہاؤس کے باہر احتجاجی مظاہرے کے شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے الطاف حسین نے امریکی انتطامیہ سے پاکستان میں سیاسی کارکنوں کے خلاف انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کی نگرانی کرنے کے لیے تجزیہ نگاروں کو بھیجنے کا بھی مطالبہ کیا۔ انہوں نے کہا کہ امریکا نہ صرف اپنے تجزیہ نگاروں بلکہ فوج کو بھی دیگر جگہوں پر بھیجتا ہے، امریکا کو چاہیئے کہ وہ انسانی حقوق کی خلاف ورزی کی مانیٹرنگ کے لیے اپنے تجزیہ نگاروں کو ضرور پاکستان بھیجے۔ ایم کیو ایم کے 20ویں سالانہ کنونشن میں پارٹی کے اہم رہنماؤں فاروق ستار، بابر غوری اور زرین مجید سمیت پورے امریکا سے کئی ہزاروں کارکنوں نے شرکت کی۔ متحدہ قومی موومنٹ (ایم کیو ایم) کے ڈپٹی کنوینر اور رکن قومی اسمبلی ڈاکٹر فاروق ستار نے 10 دن واشنگٹن میں گزارے اور کئی اہم شخصیات سے ملاقاتیں کیں۔ فاروق ستار نے بتایا کہ انہوں نے جن شخصیات سے ملاقات کی، ان میں اسٹیٹ ڈپارٹمنٹ اور وائٹ ہاؤس کے حکام شامل نہیں ہیں۔

تاریخ اشاعت : 2016-07-25 00:00:00
مقبول ترین خبریں
امیگریشن خبریں
SiteLock