سپریم کورٹ بار ایسوسی ایشن کے سابق صدور،بار کونسل کے عہدیداران اور ملک کے معروف وکلا کی محمد نواز شریف سے اسلام آباد میں ملاقات

سپریم کورٹ بار ایسوسی ایشن کے سابق صدور، پاکستان بار کونسل کے عہدیداران اور ملک کے معروف وکلا کی محمد نواز شریف سے اسلام آباد میں ملاقات

 

: محمد نواز شریف نے وکلا سے گفتگو کرتے ھوئے کہا کہ عدلیہ کی آزادی اور بحالی کی تحریک میں وکلا کے ساتھ مل کر لانگ مارچ کیا۔ جس کے نتیجے میں ملک میں عدلیہ بحال ھوئی۔

 

لانگ مارچ ملک میں انصاف اور قانون کی بالادستی کے لئے کیا تھا۔ انصاف کا حصول ھر ایک شہری کا بنیادی حق ھے۔ پاکستان بھی ایک کالے کوٹ والے قانون دان نے بنایا تھا۔ وکلا کی جمہوریت کے لئے بے مثال جدوجہد اور لازوال قربانیاں ھیں۔ نواز شریف نے کہا کہ وہ انصاف اور قانون کی بالادستی اور ووٹ کے تقدس کے لئے وکلا کو ساتھ لے کر چلیں گے۔ پاکستان کے استحکام کے لئے جمہوریت اور مضبوط جمہوری ادارے بہت ضروری ھیں۔ پاکستان سے لوڈشیڈنگ اور دھشت گردی کو تقریباً ختم کر دیا ھے۔ نواز شریف نے کہا کہ ھمیشہ خلوص نئیت سے پاکستان کی خدمت کی اور آئندہ بھی کرتا رھوں گا۔ میرے اصولی موقف اور جدوجہد کا فائدہ بالآخر پاکستان اور عوام کو ھو گا۔ ملاقات کرنے والے سینئر وکلا نے نواز شریف کو اپنے تعاون کا یقین دلایا اور کہا کہ وہ ملک میں جمہوریت اور ووٹ کے تقدس کی خاطر ان کے ساتھ ھیں- نواز شریف سے ملاقات کرنے والے وکلا میں یاسین آزاد ، لطیف آفریدی، کامران مرتضی ، اعظم نزیر تارڑ ، اختر حسین ، قلب حسن، فضل حق عباسی شامل تھے۔ ملاقات کے دوران گورنر پنجاب ، مسلم لیگ ( ن ) کی جانب سے سینیٹر ڈاکٹر آصف کرمانی ، سینیٹر سعود مجید ، رانا مقبول احمد، نصیر بھٹہ ایڈووکیٹ اور ارشد جدون ایڈووکیٹ بھی موجود تھے۔

تاریخ اشاعت : 2017-11-15 00:00:00
مقبول ترین خبریں
امیگریشن خبریں
SiteLock