نیویارک کے لئے نان سٹاپ فلائٹس شروع کرنے کی اجازت دی جائے، پی آئی اے نے امریکہ سے رابط کر لیا

 

کراچی (پاکستانی نیوز پیپر ) پاکستان انٹر نیشنل ائیر لائینز (پی آئی اے) نے پاکستان سے نیویارک نان سٹاپ ( براہ راست) پروازیں شروع کرنے کےلئے امریکی حکام سے رابطہ کرلیاہے۔ اس سلسلے میں پی آئی اے کے چیف ایگزیکٹو آفیسر مشرف رسول سیان سے امریکی قونصل جنرل کراچی گریس شیلٹن نے ملاقات کی ۔ اس ملاقات کے بعد پی آئی اے ہیڈ کوارٹر کی جانب سے جاری کردہ پریس ریلیز میں کہا گیا ہے کہ ملاقات کے دوران مشرف رسول نے امریکی قونصل جنرل سے کہا کہ پی آئی اے کی نیویارک کے لئے نان سٹاپ فلائٹس شروع کرنے کے سلسلے میں اجازت نامے کے حصول کےلئے وہ مدد کریں اور اپنا کردار ادا کریں ۔

 

پریس ریلیز میں مزید کہا گیا کہ امریکی قونصل جنرل نے پی آئی اے کی امریکہ کےلئے نان سٹاپ فلائٹس شروع کرنے کی کوششوں کو سراہا اوریقین دلایا کہ وہ اس سلسلے میں اپنا ہر ممکن کردار ادا کریں گی اور متعلقہ امریکی حکام سے بات کریں گی۔

 

واضح رہے کہ پی آئی اے نے اکتوبر سے امریکہ کے لئے اپنی پروازوں کو بند کر دیا ہے ۔ پروازوں کی بندش کی وجہ سے امریکہ میں بسنے والی پاکستانی کمیونٹی کی جانب سے شدید ردعمل کا اظہار کیا گیا اور مطالبہ کیا جا رہا ہے کہ قومی ائیرلائینز کی پروازوں کو فوراً بحال کیا جائے ۔

 

 

پی آئی اے کی پروازوں کی بندش کا ایک بڑا نقصان یہ ہوا کہ پی آئی اے کی پروازوں کی بندش کے ساتھ پی آئی اے سے امریکہ میں انتقال کرنے والے اوورسیز پاکستانیوں کی میت کی مفت پاکستان روانگی کا سلسلہ بھی بند ہو گیا ۔
پاکستانی امریکن کمیونٹی کی جانب سے پی آئی اے کی امریکہ کے لئے نان سٹاپ فلائٹس کی بحالی کی کوششوں کو سراہا گیا ہے اور کہا گیا ہے کہ یہ پیش رفت محض پریس ریلیز تک محدود نہیں رہنی چاہئیے بلکہ اس سلسلے میں جلد از جلد عملی اقدام اٹھائے جانے چاہئیے ۔

 

پاکستان مسلم لیگ (ن) یو ایس اے کے سینئر نائب صدر میاںفیاض نے کہا ہے کہ انشاءاللہ مسلم لیگ (ن) کی حکومت امریکہ میں بسنے والی کمیونٹی کے مسائل کے حل کو اولین و ترجیحی بنیادوں پر حل کرنے میں اپنا ہر ممکن کردار ادا کرے گی ۔ انہوں نے کہا کہ ہم وفاقی وزراءاحسن اقبال ، سردار یوسف اور گورنر سندھ محمد زبیر کے مشکور ہیں کہ جنہوں نے پی آئی اے پروازوں کی بحالی کے سلسلے میں ہماری تجاویز متعلقہ حکام تک پہنچائیں ۔

 

.......................................................................................

 

 



تاریخ اشاعت : 2017-11-13 00:00:00
مقبول ترین خبریں
امیگریشن خبریں
SiteLock