یوم قرارداد پاکستان اس عہد کی تجدید کے ساتھ منائیں کہ اوورسیز میں رہنے والے پاکستانی اپنے قول و فعل سے ملک و قوم کا نام روشن کریں ۔ پاکونی کے زیر اہتمام یوم قرارداد پاکستان کی عظیم الشان تقریب

 

نیویارک (خصوصی رپورٹ) پاکستانی کمیونٹی کی ایک اہم و نمائندہ تنظیم پاکستانی امریکن کمیونٹی آف نیویارک کے زیر اہتمام حسب روایت اس سال بھی یہاں یوم قرار داد پاکستان روایتی جوش و خروش کے ساتھ منایا گیا جس میں تحریک پاکستان کے حوالے سے مرکزی اہمیت رکھنے والی اس تاریخی قرار داد کے پس منظر اور اغراض و مقاصد کے اہم پہلوو¿ں پر روشنی ڈالنے کے ساتھ ساتھ کمیونٹی ارکان پر زور دیا گیا کہ یوم قرارداد پاکستان اس عہد کی تجدید کے ساتھ منائیں کہ اوورسیز میں رہنے والے پاکستانی اپنے قول و فعل سے ملک و قوم کا نام روشن کریں ۔
تقریب کے انعقاد میں پاکونی کے عہدیداران چئیرمین پرویز ریاضامرا ئ، چیف پیٹرن طارق خان پیٹرن، پریذیڈنٹ طاہر میاں ، سینئر وائس پریذیڈنٹ ضیا قریشی ، سینئر وائس پریذیڈنٹ سید وسیم، وائس چئیرمین طالب حسین ،سیکرٹری جنرل علی رشید، فنانس سیکرٹری و میڈیا کوارڈی نیٹر عون نقوی، انچارج ویمن ونگ سعدیہ تقی، ڈائریکٹرثمینہ نذہت، ڈائریکٹر بلال ملک اٹارنی،ڈائریکٹر مسعود سید، ڈائریکٹر حامد ملک ، ڈائریکٹر غلام مصطفی سمیت ان کے ساتھیوں نے کلیدی کردار ادا کیا ۔


تقریب میں ناسا کاونٹی کے کمپٹرولر جارج میراگوس ، قونصل جنرل راجہ علی اعجاز کے علاوہ کمیونٹی کی مختلف شعبہ ہائے زندگی سے تعلق رکھنے والی اہم شخصیات اور ارکان نے بڑی تعداد میں شرکت کی ۔ طحٰہ طاہر نے تلاوت قرآن مجید کی جبکہ صدارتی ایوارڈ یافتہ امجد حسین نے سرکار دو عالم صلی اللہ علیہ وسلم کی بارگاہ اقدس میں ہدئیہ عقیدت پیش کیا اور سماں باندھ دیا۔
پروگرا م کے پہلے حصے کی ضیاءقریشی نے نظامت کی جبکہ دوسرے حصے میں جنرل سیکرٹری علی رشید نے پروگرام آگے بڑھٹے ہوئے مہمانوں کو پاکونی کی جانب سے خوش آمدید کہا۔پریذیڈنٹ طاہر میاں نے پاکونی کے قیام کے مقاصد اور کمیونٹی کے لئے اس کے کردار پر روشنی ڈالتے ہوئے کمیونٹی ارکان پر زور دیا کہ وہ پاکونی کا حصہ بن کر موثر اور فعال انداز میں کمیونٹی کی نمائندگی کریں ۔


چئیرمین چوہدری پرویز ریاض امراءنے کہا کہ قرارداد پاکستان کے بارے میں اگرہم میں آگاہی نہیں ہو گی تو ہماری آنیوالی نسلوں میں کیا آگاہی ہو گی۔انہوں نے کہا کہ افسوس کے ساتھ کہنا پڑتا ہے کہ ہمیں یہ تو معلوم ہوتا ہے کہ فلام فلام میچ میں کس نے کیا سکور کیا ، بالی وڈ ، ہالی وڈ اور لالی وڈ کی ایک ایک فلموں کی تاریخ اور ڈائیلاگ یاد رکھتے ہیں لیکن وہ بنیاد اور ماضی کی جس کے تحت ہمارا ماضی ، حال اور مستقبل وابستہ ہے ، اسے یکسر نظر انداز کردیتے ہیں ۔ ہمیں یوم قرار داد پاکستان اس عہد کی تجدید کے ساتھ منانا چاہئیے کہ آنیوالی نسلوں کو قومی نظریات اور تاریخ سے آگاہ رکھیں گے ۔ انہوں نے کہا کہ دو قومی نظرئیہ نے ہمیں ایک آزاد قوم ہونے کا احساس دلایا، قومی شعور کو جاگر کیا۔


وائس چئیرمین طالب شیخ نے کہا کہ 1940میں قرارداد پاکستان پیش کی گئی اور سات کے بعد پاکستان وجود میں آگیا۔ ہمیں اپنی تاریخ اور اقدار کو آنیوالی نسلوں کو منتقل کرنا ہے۔
چیف پیٹرن طارق خان نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ صدر ڈونلڈ ٹرمپ دور کی وجہ سے حالات تبدیل ہو گئے ہیں ،ہمیں امریکی قومی سیاست میں حصہ لینا ہے۔ امریکہ میں پاکستانی کمیونٹی ساتویں بڑی کمیونٹی ہے۔ ہم سیاست کی بجائے ہر شعبے میں متحرک ہیں۔


تقریب میں روبی ملک اور ان کی ٹیم کے بچوں نے روایتی انداز میں قومی نغمے پر پرفارمنس کا مظاہر ہ کیا ، ان کے ساتھ پاکونی کے عہدیداران بشمول قونصل جنرل نے بھی پاکستانی و امریکی جھنڈے ہاتھوں میں لے کر جوش و خروش کے ساتھ ملی نغمے گائے ۔
تقریب میں شریک کونسل مین ویسٹ آئسلپ سیم گنزالس نے کمیونٹی ارکان سے کہا کہ وہ الیکشن میں ان کی سپورٹ کریں ۔ انہوں نے کہا کہ پاکستانی کمیونٹی کا ناسا کاو¿نٹی کی ووٹنگ سیاست میں اہم کردار ہے۔


ناسا کاو¿نٹی کے کمپٹرولر جارج میرا گوس نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پاکونی کا کردار قابل ستائش ہے۔ مجھے گذشتہ کئی سالوں سے اس تنظیم کی سرگرمیوں کا حصہ بننے کا اعزاز حاصل ہوا ہے ۔ پاکونی کی اہم خدمت پاکستانی امریکن کموینٹی کو سیاسی و سماجی طور پر متحرک بنانا ہے جو کہ قابل ستائش ہے ۔ یہ کردار نہ صرف موجودہ بلکہ آنیوالی نسلوں کے لئے بھی بہت اہم ہے۔ سیاست کا ہر شعبے پر اثرات مرتب ہوتے ہیں۔ لہٰذا اس کو نظر انداز نہیں کرنا چاہئیے۔


قونصل جنرل راجہ علی اعجاز نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ 23مارچ قرارداد کے لیڈروں نے پاکستان سیاسی جدوجہد کے ذریعے حاصل کیا۔ قائد اعظم نے کسی ایک موقع ہر کسی قسم کے انتہائی اقدام کی سیاست سے منع کیا۔ انہوں نے ایک سٹوڈنٹ سے کہا کہ تحریک پاکستان کے لئے تعلیم نہ چھوڑنا کیونکہ تمہاری تعلیم ہی ہمارا سب سے بڑا ہتھیار ہے۔ ہمیں اپنے بانیوں کے نقش قدم پر چلنا ہوگا۔ قرارداد کے بعد بیس ملین سے زائد لوگوں نے الگ وطن کے لئے ہجرت کی۔
طاہر میاں نے خطاب کرتے ہوئے پاکونی کے امراض و مقاصد بیان کئے۔ سب کو خوش آمدید کہا۔انہوںنے کہا کہ یوم قرار داد پاکستان منانے کا مقصد کمیونٹی میں اس اہم قرارداد ، اس کی اہمیت اور آنیوالی نسلوں کے لئے اس کے بارے میں آگاہی پیدا کرنا ہے ۔
پاکونی کی جانب سے حسب روایت اس سال بھی کمپٹرولر ناسا کاو¿نٹی جارج میرا گوس، ان کے معاون دلیپ چوہان ، برونکس کمیونٹی کونسل کے شبیر گل ، پاکستانی امریکن یوتھ سوسائٹی (PAYS)کے کاشف حسین ، معروف و سینئر صحافی معوذ صدیقی ، معروف اینکرپرسن سلیم احمد ملک اور ڈاکٹر ممنوں اقبال کی خدمات کے اعتراف کے طور پر انہیں خصوصی ایوارڈز پیش کئے گئے جو کہ پاکونی عہدیداران نے انہیں قونصل جنرل راجہ علی اعجاز کے ساتھ ملکر پیش کیا ۔


تقریب میں ناسا کاو¿نٹی کے کمپٹرولر جارج میرا گوس کی جانب سے نیویارک پولیس ڈیپارٹمنٹ کے لیفٹنٹ عدیل رانا ، سارجنٹ ضیغم عباس، عون نقوی، فروا طاہر، طالب حسین، سعدئیہ تقی، ضیا قریشی، اطہر ترمذی، بسما احمد ،طارق خان ، طالب شیخ ، ضیاءقریشی ،علی رشید کو ان کی خدمات کے اعتراف کے طور پر خصوصی طور پر سائٹیشن پیش کی گئیں ۔
آخر میں معروف گلوکار ہ مہوش شاہ نے اپنے فن کا مظاہر ہ کیا اور شرکاءکو قومی نغموں سے محظوظ کیا ۔


تاریخ اشاعت : 2017-04-01 00:00:00
مقبول ترین خبریں
امیگریشن خبریں
SiteLock