اوورسیز پاکستانی کمیشن پنجاب کے وائس چئیرمین خالد شاہین بٹ کی نیویارک میں کھلی کچہری

 

نیویار ک (خصوصی رپورٹ) اوورسیز پاکستانی کمیشن پنجاب کے وائس چئیرمین خالد شاہین بٹ نے گذشتہ ہفتے یہاں نیویارک میں ایک کھلی کچہری کی صورت میں پاکستانی امریکن کمیونٹی کے ارکان سے تفصیلی ملاقات کی ، انہیں کمیشن کے قیام کے اغراض و مقاصد بیان کرتے ہوئے امریکہ سمیت دنیا بھر میں بسنے والے لاکھوں پاکستانیوں کے لئے اس کے کردار اور اب تک کی کارکردگی کے بارے میں تفصیل سے آگاہ کیا۔


رائل بینکوئٹ ہال میں منعقد ہونیوالی کمیونٹی ارکان سے ”ملاقاتِ عام“ میں قونصل جنرل راجہ علی اعجاز ، امریکہ کے دورے پر آئے رکن پنجاب اسمبلی شہزاد منشی ، کمیونٹی کے مقامی قائدین شفیق صدیقی ، سردار سوار خان ، مسلم لیگ (ن) یو ایس اے کے صدر روحیل ڈار کے علاوہ کمیونٹی کی مختلف شعبہ ہائے زندگی سے تعلق رکھنے والی مقامی شخصیات اور ارکان نے بڑی تعداد میں شرکت کی ۔کھلی کچہری کے انعقاد میں کمیونٹی قائدین میاں فیاض، رانا سعید، احمد جان، راجہ آزاد گل سمیت ان کے ساتھیوں نے کلیدی کردار ادا کیا ۔


خالد شاہین بٹ نے کہا کہ امریکہ کے نجی دورے پر ہیں ۔اس دوران بروکلین میں یہ کمیونٹی کے ساتھیوں کے ساتھ ایک غیر سمی ملاقات ہو گی تاہم انہوں نے کہا کہ اوورسیز پاکستانی کمیشن پنجاب آئندہ دو ماہ میں باقاعدہ طور پر سرکاری دور پر اپنے اعلیٰ حکام کے ساتھ امریکہ بھر کا دورہ(روڈ شو) کرے گا۔اس دورے میں وہ مختلف اہم شہر کہ جہاں پر کمیونٹی ارکان بڑی تعداد میں آباد ہیں، سے تفصیلی ملاقاتیں کرکے انہیں کمیشن کے اغراض و مقاصد بتائیں گے اور کوشش کریں گے کہ کمیونٹی اس سے بھرپور مستفید ہو۔انہوں نے مزید کہا کہ اب تک کمیشن کی کارکردگی بہتر جا رہی ہے ۔ 52فیصد شکایات اور درخواستوں پر لئے جانیوالے ایکشن کے مثبت نتائج برامد ہوئے ہیں ،بیرون ممالک میں بسنے والے پاکستانیوں کو نہ صرف فائدہ پہنچ رہا ہے بلکہ بعض کیسوں میںجہاں ان کے کروڑوں روپے نقصان ہوا، کمیشن کے ایکشن کی وجہ سے ان کے نقصان کا الحمد اللہ ازالہ ہوا۔

 


 

مسلم لیگ (ن) یو ایس اے کے صدر روحیل ڈار نے اوورسیز پاکستانی کی حیثیت سے ہمیں وزیر اعظم میاں نواز شریف ، وزیر اعلیٰ میاں شہباز شریف کی بصیرت اور دور اندیشی پر فخر ہے کہ جنہوں نے اوورسیز پاکستانیوں کے مسائل کے حل کے لئے پنجاب میں باقاعدہ طور پر ایک ادارہ تشکیل دیا جسے اب خالد شاہین بٹ بطریق احسن نبھا رہے ہیں۔ یہ یقینی طور پر ایک غیر جانبدار ، غیر سیاسی ادار ہ ہے جو کہ بلا امتیاز بیرون ممالک میں مقیم پاکستانیوں کےلئے اپنا کردار ادا کررہا ہے ۔


قونصل جنرل راجہ علی اعجاز نے کہا کہ کمیشن کے قیام کا فائدہ سب سے زیادہ ہمیں پہنچا ۔ بہت سے کمیونٹی ارکان جو پاکستان سے متعلقہ اپنے مسائل کے ساتھ ہمارے پاس آتے تھے، اب ہم ان کو کمیشن کی جانب ریفر کر دیتے ہیں ۔انہوں نے کہا کہ ایسے ادارے دوسرے صوبوں میں بھی بننے چاہئیے ۔


پاکستان مسلم لیگ (ن) یو ایس اے کے نائب صدر میاں فیاض نے کہا کہ اوورسیز پاکستانی کمیشن پنجاب، بیرون ممالک میں بسنے والے تمام پاکستانیوں کا ادار ہ ہے ۔اس کے اغراض و مقاصد میں واضح ہے کہ اسے بلا امتیاز کمیونٹی ارکان کے مسائل کے حل میں اپنا کردار ادا کرنا ہے ۔ اس سلسلے میں ہم وائس چئیرمین کیپٹن (ر) خالد شاہین بٹ کو ان کی بہترین کارکردگی پر مبارکباد پیش کرتے ہیں ۔ انہوں نے مزید کہا کہ ہم وزیر اعلیٰ میاں شہباز شریف اور وزیر اعظم میاں نواز شریف کے بھی مشکور ہیں کہ جنہوں نے نہ صرف ہماری تجاویز بلکہ الیکشن سے پہلے انہیں اوورسیز پاکستانیوں کی جانب سے بھی جو باتیں کہی جاتی رہی تھیں ، کو پیش نظر رکھتے ہوئے یہ ادارہ قائم کیا ۔ہم کمیشن کے قائدین کو اپنے ہر ممکن تعاون کا یقین دلاتے ہیں ۔

 


 

کھلی کچہری میں پاکستانی کمیونٹی کی مقامی اہم شخصیات اور ارکان جن کا اوورسیز پاکستانی کمیشن پنجاب سے کسی نہ کسی مسلہ کی صورت میں واسطہ پڑا نے بھی کھل کر اس کے کردار کو سراہا اور کہا کہ بلا شبہ اس ادارے کے قیام سے ان کے مسائل کے حل میں اہم پیش رفت ہوئی ۔ان ارکان نے کہا کہ پنجاب میں جائیداد اور زمینوں پر قبضے ، لین دین کے معاملات اور تھانے کچہری کے معاملات میں انہیں مسائل درپیش ہوئے جس کے بعد انہوں نے لاہور میں خالد شاہین بٹ سے رابطہ کیا جنہوں نے معاملات کا فوری نوٹس لیا ۔


کھلی کچہری میں شریک دو ارکان نے پاکستان میں اپنی جائیداد پر قبضے کی شکایات بیان کیں جن کا وائس چئیرمین کی جانب سے نوٹس لیتے ہویئے متاثرین کو یقین دلایا گیا کہ وہ اپنی شکایات آن لائن یا بذریعہ فون کمیشن میں درج کروادیں ، وہ اس پر ہر ممکن کاروائی کو یقینی بنائیں گے ۔


خالد شاہین بٹ نے کہا کہ شکاگو سے پاکستان منتقل ہونے والے ایک اوورسیز پاکستانی کو اس کے رشتے داروں کی جانب سے اس کے والد کی جائیداد کے جائز حق سے محروم کئے جانے کے کیس میں کروڑوں کا فائدہ پہنچے گا اور اسے اس کا حق ملے گا، اسی طرح نیویارک کے ایک کیس میں ایک خاتون کو اس کی جائیداد ،دوسرے کیس میں اراضی کے معاملے میں انصاف کی فراہمی کو یقینی بنایا گیا ہے ۔انہوں نے کہا کہ کمیشن کا دائرہ کار اگرچہ پنجاب تک محدود ہے تاہم ہمارے پاس لوگ ہر قسم کے کیس لیکر آتے ہیں اور جو کیس ہم سے یا پنجاب سے متعلقہ نہ ہوں ، ہم انہیں متعلقہ اداروں کو بھجوا دیتے ہیں ۔ اوورسیز پاکستانی کمیشن پنجاب کے وائس چئیرمین نے کہا کہ میںنے وزیر اعلیٰ پنجاب میاں شہباز شریف جو کہ کمیشن کے چئیرمین بھی ہیں، کے سامنے متاثرین کے ایک اجتماع کے اجلاس میں کہا کہ کسی بھی شخص سے پوچھ لیں کہ ہم ان کی مدد بلا امتیاز ،بلا لالچ کررہے ہیں اور انشاءاللہ اپنا کردار پوری ایمانداری اور محنت سے ادا کرتے رہیں گے ۔


تاریخ اشاعت : 2016-10-11 00:00:00
مقبول ترین خبریں
امیگریشن خبریں
SiteLock