امریکہ میں پارٹی کارکنان اکٹھے ہو کر پیپلز پارٹی کا مشن آگے بڑھائیں ، نیویارک میں پیپلز پارٹی کا ورکرزکنونشن

 

پارٹی کے سینئر ساتھیوں کا ایک اہم اجلاس گذشتہ ہفتے یہاں منعقد ہوا جسے ورکرز کنونشن کا نام دیا گیا ۔ کنونشن میں مل بیٹھ کر تفصیلی مشاورت کی گئی کہ کیسے امریکہ میں پارٹی کے چیپٹر کو مزید موثر اور فعال بنایا جائے


کوینز (نیویارک ) میںمنعقدہ ورکرز کنونشن کی اس تقریب کے خصوصی مہمان خالد اعوان، جاوید اختر ، سابق رکن پنجاب اسمبلی پرویز رفیق و دیگر تھے جبکہ نظامت کے فرائض لطیف ڈالمیا نے انجا م دئیے


خالد ملک کی صدارت اور جاوید ملک کی میزبانی میں منعقدہ اجلاس میں ملک مرتضی، محمد سلمان بٹ، انجم ملک، ڈاکٹر فخر الدین ،عمر جاوید، طاہر سلیمی، قاری یعقوب ، رو¿ف بھلی ،سید علمدار حسین کی شرکت


 اجلاس میں واضح کیا گیا ہے کہ کنونشن کے انعقاد کا مقصد کسی کے خلاف کوئی گروپ یا محاذ آرائی کرنا نہیں بلکہ پارٹی کے کارکنوں کو ایک پلیٹ فارم پر متحد کرکے انہیں متحر و فعال بنانا ہے ۔

نیویارک (خصوصی رپورٹ) امریکہ میں مقیم پاکستان پیپلزپارٹی کے سینئر ساتھیوں اور کارکنان کا ایک اہم اجلاس گذشتہ ہفتے یہاں منعقد ہوا جسے ورکرز کنونشن کا نام دیا گیا ۔ کنونشن میں پارٹی کے سابق عہدیداران ، سینئر ساتھیوں اور کارکنان نے مل بیٹھ کر تفصیلی مشاورت کی کیسے امریکہ میں پارٹی کے چیپٹر کو مزید موثر اور فعال بنایا جائے اور پارٹی قائدین آصف علی زرداری اور بلاول بھٹو زرداری کی قیادت میں قائد عوام ذوالفقار علی بھٹو ، شہید جمہوریت محترمہ بے نظیر بھٹو شہید اور پارٹی کے ایجنڈے کو آگے بڑھایا جائے ۔
ورکرز کنونشن کی اس تقریب کے خصوصی مہمان سینئر رہنما پی پی پی یو اس اے خالد اعوان، سابق ایڈیشنل انفارمیشن سیکرٹری پی پی پی پنجاب جاوید اختر ، سابق رکن پنجاب اسمبلی پرویز رفیق،سابق انفارمیشن سیکرٹری نیویارک خواجہ فاروق تھے۔ نظامت کے فرائض لطیف ڈالمیا نے انجا م دئیے ۔
ورکرز کنونشن سے خطاب کرنے والے مقررین ، پارٹی کے مقامی قائدین اور ساتھیوں میں ملک مرتضی، محمد سلمان بٹ، انجم ملک، ڈاکٹر فخر الدین (سابق انفارمیشن سیکرٹری پی پی پی پنجاب)، کم سن عمر جاوید جو کہ ملک رحمان کے نواسہ ہیں، طاہر سلیمی، قاری یعقوب ، رو¿ف بھلی (سابق ایم پی اے سیالکوٹ)، خواجہ فاروق، ارشد چوہدری، سید علمدار حسین تھے ۔
پارٹی کے مرکزی رہنما و سابق وزیر داخلہ رحمان ملک کے بھائی خالد ملک کی صدارت میں منعقدہ تقریب کے میزبان جاوید ملک تھے۔کنونشن میں شرکاءنے باہمی اتحاد و یکجہتی کا مظاہرہ کرتے ہوئے اس امر پر زور دیا کہ انفرادی کی بجائے اجتماعی اور پارٹی ایجنڈے کو آگت بڑھایا جائے ۔
خالد اعوان نے اپنے خطاب میں کہا چونکہ ہمارے چیئرمین نے یہ فیصلہ کیا ہے اور کوششیں بھی شروع کر دی ہیں پارٹی کے پرانے اور ناراض قائدین اور کارکنوں کو منایا جائے ، اس لئے ہم ان کی کوششوں کو آگے بڑھاتے ہوئے امریکہ بھر میں پارٹی کے سب نئے اور پرانے ساتھیوں کو اکٹھے کرکے دوبارہ متحرک کررہے ہیں ۔
کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے مذکورہ مقامی قائدین نے کہا کہ پارٹی کے شریک چیرمین آصف علی زرداری اور چیئرمین بلاول بھٹو زرداری جیسے آجکل پارٹی کو الیکشن سے پہلے مضبوط کرنے کےلئے انتھک محنت کر رہے ہیں، وہ قابل ستائش اور قابل تقلید ہیں ۔ انشاءاللہ پیپلز پارٹی ایک بار پھر نہ صرف پاکستان بلکہ اوورسیز میں سب سے بڑی اور وفاق کی علامت جماعت بن کر ابھرے گی ۔
کنونشن میں پارٹی قائدین نے کہا کہ سب ایک دوسرے سے اگر کوئی چھوٹے موٹے اختلافات ہیں تو انہیں بھلا کر متحد ہو کر آگے بڑھیں اور الیکشن سے پہلے اپنے کردار کی بھرپور تیاری کریں ۔ اجلاس میں واضح کیا گیا ہے کہ کنونشن کے انعقاد کا مقصد کسی کے خلاف کوئی گروپ یا محاذ آرائی کرنا نہیں بلکہ پارٹی کے کارکنوں کو ایک پلیٹ فارم پر متحد کرکے انہیں متحر و فعال بنانا ہے ۔  ۔

 

تاریخ اشاعت : 2017-05-15 00:00:00
مقبول ترین خبریں
امیگریشن خبریں
SiteLock